96

آرمی چیف اہم میٹنگ میں آنے کے لیے وزیراعظم کو ڈیڑھ گھنٹہ مناتے رہےخورشید شاہ کا حیران کن انکشاف

نجی ٹی وی پروگرام میں پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما خورشید شاہ نے ایک سوال کے جواب میں دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہماری ایک دفعہ میٹنگ تھی جس میں چیف آف آرمی سٹاف ڈیڑ ھ گھنٹہ لیٹ آئے کیونکہ وہ وزیراعظم عمران خان کو ہمارے ساتھ بیٹھنے کیلئے مناتے رہے ہیں ۔پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما خورشید شاہ کہنا تھا کہ ہم ساتھ بیٹھنے کیلئے ڈیڑھ گھنٹہ
انتظارکر تے رہے اور بعض انتظار کر کر کے لوگ تو تنگ ہو گئے تھے اور یہ بولنے ہی والے تھے کہ ہم جارہے ہیں اتنے میں

آرمی چیف پہنچ گئے لیکن وزیراعظم عمران خان پھر بھی نہ آسکے ۔ دوسری جانب پاکستان پیپلز پارٹی کے سینئر رہنماسیدخورشیداحمد شاہ نے کہاہے کہ خود کو بڑا ایماندار کہنے والا فارن فنڈنگ میں بے نقاب ہوگیا ہے،عمران خان کو فارن فنڈنگ کیس کے بعد مزید سیاست نہیں کرنی چاہیے۔گفتگو کرتے ہوئے خورشید شاہ نے کہا کہ عمران خان کہتا تھا اپنا اور ساتھیوں کا احتساب کرونگا، عمران نیازی نے سات سال تک فارن فنڈنگ کیس کو سپریم کورٹ میں لٹکا رکھا تھا۔

انہوں نے کہاکہ کن لوگوں اور اداروں نے عمران کو فنڈز دیا تھا الیکشن کو اوپن بتانا چاہیے، پیپلز پارٹی سمیت اپوزیشن کی تمام جماعتیں فارن فنڈز کا احساب دینے کے لیے تیار ہے، منی بجٹ کسی کو خوش کرنے کے لیے لایا جا رہا ہے، منی بجٹ پاکستان کے عوام کو دبانے کے لیے لایا جا رہا ہے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان کو مقروض کیا جا رہا ہے، تین سالوں میں حکومت نے 19 ہزار بلین قرض لیا، موجودہ حکومت اور وزیراعظم جرم کررہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں