174

بیٹا باپ کے بغیر ایک لمحہ بھی نہیں رہتا تھا۔7 بہنوں کا اکلوتا بھائی بھی مری سانحے کا شکار ہونے والے اسد کی کہانی

مری سانحے میں جان سے جانے والے 4 دوستوں کی آخری سیلفی تو لوگوں نے دیکھی ہی تھی لیکن وہ 4 دوست اپنے ساتھ چار خاندان بھی رکھتے تھے۔

چھ ماہ کا بیٹا

جیسے جیسے وقت گزرتا جارہا ہے سانحے سے جڑی دل دہلانے دینے والی حقیقتیں سامنے آرہی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق اس سیلفی میں پیچھے کھڑا ہوا نوجوان اسد مردان کا شہری تھا۔ اسد کی شادی کو دو سال ہی ہوئے تھے اور اس کا 6 ماہ کا بیٹا تھا جسے ابھی باپ کہ شفقت سے پوری طرح آشنائی بھی نہ ہوپائی تھی کہ یتیمی نے آلیا۔

7 بہنوں کا اکلوتا بھائی

اسد نہ صرف 7 بہنوں کا اکلوتا بھائی تھا بلکہ گھر کا واحد کمانے والا تھا جو سریے کا کاروبار کرتا تھا۔ مری میں سیر کے لئے گیا اسد آخری سیلفی لینے کے بعد خالقِ حقیقی سے جا ملا اور اپنے منتظر خاندان کو ہمیشہ کا انتظار بھی سونپ گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں