لاہورہائیکورٹ نے ایف بی آرکو جہانگیر ترین کی شوگرملز کیخلاف آڈٹ کا حتمی فیصلہ کرنے سے روک دیا

لاہور ہائیکورٹ نے جہانگیر ترین کی شوگر ملز کا آڈٹ کرنے کے اقدام کے خلاف درخواست پر حکم امتناعی جاری کرتے ہوہے نوٹس پر عملدرآمد روکتے ہوئے ایف بی آر سے جواب طلب کر لیا۔ لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس راحیل کامران شیخ نے جے ڈی ڈبلیو کی درخواست پر سماعت کی ۔درخواست میں موقف اپنایا گیا کہ ایف بی آر نے 21 مئی کو آڈٹ کرنے کا نوٹس بھجوایا۔ انکم ٹیکس سے متعلق دستاویزات اور ریکارڈمانگا گیا ۔ایف بی آر کو پانچ برس گزرنے کے بعد آڈٹ کرنے کا اختیار نہیں ۔2015 کا ٹیکس آڈٹ کرنے کا قانونی عرصہ گزر چکا ہے ۔ایف بی آ نے غیر قانونی طو رپر آڈٹ نوٹس بھیجا ۔استدعا ہے کہ آڈٹ نوٹس کالعدم قرار دیا جائے اور ایف بی آر کو تادیبی کاروائی سے روکا جائے۔‎

اپنا تبصرہ بھیجیں