مسلم لیگ ن ہار تب تسلیم کرے گی جب اس کو ہرایا تو جائے، مریم نواز

شیر کا شکار کرنا آسان نہیں رہا، تھوڑا انتظار کریں! شیر کا شکار کرنے کی داستان سامنے آنے والی ہے، عوام اپنا حق واپس لے کر رہے گی۔ نائب صدر(ن) لیگ کا بلاول بھٹو کے بیان پر ردعمل

مسلم لیگ ن ہار تب تسلیم کرے گی جب اس کو ہرایا تو جائے، مریم نواز

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن ہار تب تسلیم کرے گی جب اس کو ہرایا تو جائے، شیر کا شکار کرنا آسان نہیں رہا، تھوڑا انتظار کریں! شیر کا شکار کرنے کی داستان سامنے آنے والی ہے، عوام اپنا حق واپس لے کر رہے گی۔ انہوں نے ٹویٹر پر چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کے بیان پر اپنے ردعمل میں کہا کہ مسلم لیگ ن ھار تب تسلیم کرے گی جب اس کو ہرایا تو جائے۔

شیر کا شکار کرنا آسان نہیں رہا۔ شیر کو ہرانے کے لیے جو ہتھکنڈے آپ نے آزمائے، ان کی داستان بھی سامنے آنے والی ہے۔ انتظار فرمائیے اور یاد رکھیے! مسلم لیگ ن اپنا اوراین اے249 کے عوام کا حق واپس لے کے رہے گی انشاءاللّہ! انہوں نے کہا کہ الیکشن میں شکست اگر عوام کے فیصلے کی وجہ سے ہوگی تو سرِ تسلیم خم ہوگا۔

واضح رہے پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ این اے249 میں پیپلزپارٹی کی تاریخی کامیابی نے ثابت کردیا کہ عوام حکومت کے ساتھ نہیں۔ کراچی کے عوام نے سلیکٹڈ حکومت کو ریجیکٹ کردیا ہے۔ عوام نے پھر سے پی ٹی آئی کو عبرتناک شکست دی ہے۔ نہوں نے کہا کہ اگر کوئی الیکشن پر الزامات لگا رہا ہے تو ثابت کرے۔

شاہد خاقان عباسی آراو آفس میں موجود تھے اور اپنی ہار دیکھ رہے تھے۔ پتا نہیں تھا کہ اپنی ہار کو دیکھ کر ن لیگ دھاندلی کا الزام لگائے گی؟ پاکستان کی تاریخ دیکھ لیں کون سی جماعت مقامی جماعت ہے، کس نے زیادہ دھاندلی کی ہے، کل این اے 249 میں بہت سنا کہ ڈسکہ ٹو ڈسکہ ٹو، ان کا شوق ہے اپوزیشن سے اپوزیشن کرنا، مسلم لیگ ن اسٹیبلشمنٹ اور عمران خان کی بجائے ہم سے مقابلہ کرنا چاہتے ہیں، تو مقابلہ کرو، مگر آپ ہار جاؤ گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں