حکومت نے بدترین مہنگائی کرکے قوم کا تیل نکال دیا، اب قوم کو اٹھناہو گا،شہبازشریف

مسلم لیگ(ن) کے صدر میاں شہبازشریف نے کہا ہے کہ ملک معاشی طور پر بدحال ہو چکا ہے ،حکومت نے قرضے لے کر ہر ایک شہری کو مقروض کر دیا ہے، حکومت نے بدترین مہنگائی کرکے قوم کو تیل نکال دیاہے، اب قوم کو اٹھنا ہو گا اور مہنگائی کے خلاف احتجاج کرنا ہو گا،حکومت کو سمندر برد کرنا ہو گا، لاکھوں لوگ بیروزگار ہو چکے ہیں، 2023میں پی ٹی آئی کی سیاست ہمیشہ کے لئے دفن کردیں گے، مطالبہ نہیں حق ہے کہ 2023میں شفاف الیکشن مہیا کرنا ہونگے،
سلیکٹڈنیسوا 3 سال میں ملک کوتباہ کردیا، آج غریب آدمی

مہنگی دوائی نہیں خریدسکتا۔راولپنڈی ورکرزکنونشن سے شہباز شریف نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ راولپنڈی والو !غور سے سن لو نواز شریف اور اپنی طرف سے مبارکباد دیتا ہوںاورآپ نے غیر معمولی کامیابی حاصل کی راولپنڈی کینٹ چکلالہ اور مری سے آپ نے کامیابی حاصل کی۔ دس بارہ سال پہلے پی ٹی آئی نے آنکھ کھولی کنٹونمنٹ بورڈ الیکشن میں آپ نے پی ٹی آئی کی سیاست ختم کردی ہے۔شہبازشریف نے کہا کہ کنٹونمنٹ الیکشن میں کامیابی پر مبارکباد پیش کرتا ہوں،راولپنڈی والوں کو(ن)لیگ کی جانب سے مبارکباد پیش کرتا ہوں،کنٹونمنٹ بورڈ کے انتخابات میں کامیابی معمولی بات نہیں، کنٹونمنٹ بورڈزکے انتخابات میں دھاندلی نہیں ہوئی۔انہوںنے کہاکہ ہمارا عدلیہ سمیت تمام اداروں سے شفاف الیکشن کا مطالبہ ہے، پی ٹی آئی کی سیاست کو ہمیشہ کے لیے دفن کردیں گے۔

انہوں نے کہاکہ ملک میں شعور پیدا ہوگیا ہے کہ سلیکٹڈ وزیر اعظم نے ملک تباہ کردیا،بیس بیس گھنٹوں کی لوڈشیڈنگ ختم کی، سی پیک ہم لائے ،عمران اور اس کے حواریوں نے اس کو ختم کرنے کی کوشش کی ،ہمارے پانچ سالوں میں ملک کی تقدیر بدل رہی تھی ۔انہوںنے کہاکہ ہماری چوتھی باری آتی تو ملک کو بھارت سے آگے لے جاتے ۔آٹا دال، چینی، گیس بجلی، پیٹرول کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں ۔ڈالر کی قیمت آسمان سے باتیں کررہی ہے، ادویات کے نام پر ڈاکہ ڈالا گیا چینی ہمارے دور میں 52 اور آج 110روپے ہے۔جبکہ سلیکٹڈ وزیر اعظم کہتا ہے آپ نے گھبرانا نہیں۔صدر مسلم لیگ(ن) نے کہا کہ حکومت نے اس قوم کو تیل نکال دیاہے،ملک معاشی طور پر بدحال ہو چکا ہے ،حکومت نے قرضے لے کر ہر ایک شہری کو مقروض کر دیا ہے،مہنگائی نے احتجاجی صورتحال پیدا کر دی ہے، اب قوم کو اٹھنا ہو گا اور مہنگائی کے خلاف احتجاج کرنا ہو گا،حکومت کو سمندر بدر کرنا ہو گا، لاکھوں لوگ بیروزگار ہو چکے ہیں،کہتے تھے 50 لاکھ گھر اور 1 کروڑ نوکریاں دیں گے۔

یہ دور اگر نواز شریف کا ہوتا تو غریب آدمی خوشحال ہوتا،ڈالر آج 170 روپے تک پہنچ گیا ہے،بیرون ملک سے آنے والی ادویات کو مہنگا کر دیا گیا چینی نواز شریف کے دور میں 52 روپے تھی اور آج وہ چینی 110 روپے تک پہنچ گئی آٹا 70 روپے فی کلو کو کراس کر چکا ہے،پنڈی والوں یاد کرو جب میں نے رمضان سستے بازاروں میں آتا تھا۔قبل ازیں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ ملک میں شفاف انتخابات نہیں ہوئے، مہنگائی اور غربت سے عوام تنگ آچکے ہیں جس کے باعث حکومت کا بسترکسی بھی وقت گول ہوسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ جھگڑے کارکنوں کے نہیں قیادتوں کے ہیں، آپ کی مقامی پارٹی قیادتوں میں لڑائیاں ہیں۔ انتخابات کسی بھی وقت ہوسکتے ہیں، جھگڑے ختم نہ کیے تو کبھی بھی کامیاب نہیں ہوسکیں گے، آئندہ الیکشن میں اگر حکومت کیلئے مینڈیٹ حاصل کرنا ہے تو اپنی صفوں میں اتحاد پیدا کرنا ہوگا۔خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ پاکستان کی جمہوری تحریک میں مسلم لیگ ن کی قربانیاں مثال رکھتی ہے، احسن اقبال اور رانا ثنا اللہ نے سختیاں برداشت کی ہیں، ن لیگ نے ہمیشہ پاکستان کیعوام کی خدمت کی ہے، کنٹونمنٹ انتخابات میں ن لیگ کی کامیابی خدمت کا ثمر ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں