مشہور سیاستدان مشہور شخصیات بیٹیاں جو والدین کے ساتھ رہتی ہیں۔

اگرچہ پاکستانی سیاستدان ٹی وی پر نظر آتے ہیں ، لیکن عام زندگی میں یہ سیاستدان اپنے خاندانوں کا ساتھ دیتے نظر آتے ہیں۔

ہماری ویب کی اس خبر میں ہم آپ کو ان سیاستدانوں کے بارے میں بتائیں گے جو ہر ممکن طریقے سے اپنی بیٹیوں کی مدد کر رہے ہیں ، کوئی کاروبار میں مدد کر رہا ہے پھر شوہر سے علیحدگی کے بعد بیٹی کو ہمت دے رہا ہے۔

جہانگیر ترین:

اگرچہ جہانگیر ترین کا شمار پاکستان کی بااثر شخصیات میں ہوتا ہے لیکن وہ اپنی بیٹی کے سامنے سب کچھ قربان کردیتے ہیں۔ اس نے اپنی بیٹیوں کی خواہشات کو پورا کرنے کے لیے ان کے کاروبار کو بھی سپورٹ کیا۔

ان کی بیٹی سحر ترین ملک کی مشہور فیشن ڈیزائنر ہیں جبکہ والد بھی اپنی بیٹی کو کامیاب دیکھ کر خوش ہیں۔ والد نے سحر کے کاروبار کو کامیاب بنانے کے لیے اپنا مکمل تعاون دیا تھا۔ دوسری بہن مہر ترین بھی فیشن ڈیزائنر ہیں۔ تیسری بیٹی مریم ترین بھی ایک کامیاب بیٹی ہے۔

آصف علی زرداری:

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما آصف علی زرداری بھی اپنی بیٹیوں سے بہت پیار کرتے ہیں۔ آصف علی زرداری اپنی دو بیٹیوں آصفہ اور بختاور کی حمایت کرتے ہیں۔ چونکہ بختاور سیاست میں اس حد تک دلچسپی نہیں رکھتی ، اس لیے اسے اس کے مفادات کے مطابق سپورٹ کیا جاتا ہے ، جبکہ اس کے والد آصفہ کو سیاست میں آنے کے لیے سپورٹ کر رہے ہیں۔ چونکہ آصفہ کو جانور پالنے کا بھی شوق ہے اس لیے آصف علی زرداری نے بلاول ہاؤس میں آصفہ کے جانوروں کے لیے خصوصی انتظامات کیے ہیں۔

پرویز بٹ:

لاہور کی مشہور شخصیت پرویز بٹ کی بیٹی حنا پرویز بٹ کا شمار پنجاب کی ابھرتی ہوئی خواتین سیاستدانوں میں ہوتا ہے۔ حنا ایک مثالی شادی کرنا چاہتی تھی ، لیکن ہر بار نہیں۔ حنا کی شادی زیادہ دیر تک قائم نہ رہی اور طلاق پر ختم ہو گئی۔

حنا پرویز بٹ نے طلاق کے بعد بھی اپنی زندگی کا خاتمہ نہیں ہونے دیا اور اپنی تعلیم مکمل کرنے کا فیصلہ کیا جس کو اس کے خاندان سمیت اس کے والد نے بھی سپورٹ کیا۔ حنا نے جب فیشن ڈیزائننگ کی دنیا میں قدم رکھا تو باپ نے بھی اس سلسلے میں اپنی بیٹی کا ساتھ دیا۔

مریم نواز شریف:

مسلم لیگ (ن) کے سربراہ نواز شریف نے ہر موقع پر اپنی بیٹی مریم کی حمایت کی ہے چاہے مریم نواز کی کیپٹن صفدر سے شادی ہو یا سیاست میں آنے کا فیصلہ۔ نواز شریف نے ہمیشہ اپنی بیٹی کا ساتھ دیا ہے۔

یوسف رضا گیلانی:

سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کی بیٹی بتول گیلانی کی شادی خرم خان سے ہوئی تھی ، لیکن فضا بتول اپنے شوہر سے الگ ہو گئیں۔ فضا نے اپنے سابق شوہر پر ذہنی اور جسمانی استحصال کا الزام لگایا۔ اپنی بیٹی کو مشکل حالات میں دیکھ کر والد یوسف رضا گیلانی نے نہ صرف اس کا ساتھ دیا بلکہ اس کی ہمت اور حوصلہ بھی بڑھایا۔

فضا نے اپنے بیٹے کی تحویل کے لیے عدالت سے بھی رجوع کیا تھا ، جس پر باپ اپنی بیٹی کے ساتھ کھڑا تھا۔ وہ اب بھی اپنے والد کی محبت اور پیار کے بغیر نہیں رہ سکتی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں