مدینہ میں پہلے ریاست وجود میں آئی اس کے بعد پیسہ اور خوشحالی آئی.عمران خان

مدینہ میں پہلے ریاست وجود میں آئی اس کے بعد پیسہ اور خوشحالی آئی.عمران ..

ہماری سوچ کی سمت ہی غلط رہی ہے ‘74سالوں سے ہم ایسی منصوبہ بندیوں میں پھنسے ہیں جن سے کوئی نتیجہ نہیں نکلنے والا ‘ہماری سوچ رہی ہے پہلے پاس پیسہ اکٹھا ہوگا، ملک میں سرپلس ہوگا تو ہم غریبوں پر لگائیں گے.وزیراعظم کا کامیاب پاکستان پروگرام کی افتتاحی تقریب سے خطاب

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ریاست مدینہ دنیا کی پہلی فلاحی ریاست تھی جس کے ماڈل کا کوئی ثانی نہیں مدینہ کی ریاست میں پہلے اسٹیٹ وجود میں آئی اس کے بعد پیسہ اور خوشحالی آئی اسے لیے یہ تاثر بالکل غلط ہے کہ پہلے پیسہ آیا تھا پھر اسے نچلے طقبے کو منتقل کیا گیا. اسلام آباد میں کامیاب پاکستان پروگرام کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا جو کامیاب پاکستان پروگرام ہم نے آج شروع کیا ہے اسے 74 سال قبل شروع ہوجانا چاہیے تھا.

انہوں نے کہا کہ میں یہ سمجھتا ہوں کہ 74 سال قبل بڑی غلطی کی کہ ہم سمجھتے تھے کہ جب ہمارا ملک خوشحال ہوجائے، ہمارے پاس پیسہ آجائے پھر پاکستان کو فلاحی ریاست بنایا جائے گا . انہوں نے کہا کہ یہ سوچ کے پہلے ہمارے پاس پیسہ اکٹھا ہوگا، ملک میں سرپلس ہوگا تو ہم غریبوں پر لگائیں گے، یہ غلط فیصلے تھے میں ریاست مدینہ کی اس لیے بات کرتا ہوں کیوں کہ وہ دنیا کی تاریخ کا سب سے کامیاب ماڈل تھا اس کے نتائج تاریخ کا حصہ ہیں. وزیراعظم نے کہا کہ مدینہ میں پہلے فلاحی ریاست بنائی گئی تھی پھر پیسہ آیا تھا پھر خوشحالی آئی تھی، یہ خیال بالکل غلط ہے کہ پہلے پیسہ آیا تھا پھر انہوں نے نچلے طقبے کو منتقل کیا گیا.

اپنا تبصرہ بھیجیں